تازہ ترین

بارش اور برفباری سے شہرکی اکثر سڑکیں زیرآب

ناقص نکاسی آب کے نظام کی وجہ سے صورہ،بژھ پورہ،عیدگاہ اور دیگر علاقوں کے لوگوں کو مشکلات کا سامنا

7 فروری 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

ارشاد احمد
سرینگر//بدھ کو شہر میں بارشوں اور برف باری کی وجہ سے اکثر علاقوں میں بارش کا پانی نکاسی آب کے ناقص نظام کی وجہ سے سڑکوں پر جمع ہوگیا اور لوگوں کے عبور مرور اور ٹریفک کے بلا خلل نقل وحرکت میں زبردست مشکلات پیش آئیں ۔شہر کے متعدد علاقوں جن میں صورہ ،بژھ پورہ،ڈاکٹر علی جان روڈ،حول ،خانیار ،قمرواری سمیت دیگر علاقوں میں بارش کا پانی اہم شاہراہوں کے علاوہ رابطہ سڑکوں پر ہی جمع تھا۔بعض مقامات پر سڑکیں اس حد تک زیر آب تھیں کہ گاڑی چلانے والے ڈرائیوروں کوڈر تھا کہ سڑک پر کہیں کوئی کھلا مین ہول تو نہیں ہے۔شہر کی اکثر سڑکوں پر دن بھر اس وجہ سے ٹریفک کاجام تھا اور گاڑیاں سست رفتاری سے چل رہی تھیں ۔فردوس کالونی عیدگاہ کے شوکت احمد بٹ نے بتایا کہ عیدگاہ کی تمام سڑکیں اور گلی کوچے زیرآب ہیں اور لوگوں کو گھروں سے باہر نکلنے میں مشکلات پیش آرہی ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ نہ ہی میونسپل کارپوریشن اور نہ ہی کوئی اور متعلقہ محکمہ اس جانب توجہ دے رہا ہے ۔ایسی ہی صورتحال صورہ اور اس سے ملحقہ علاقوں میں بھی درپیش تھی۔ان علاقوں کے لوگوں نے بتایا کہ ناقص نکاسی آب نظام کی وجہ سے پانی گلی کوچوں اور سڑکوں پر جمع ہوکر لوگوں کے صحنوں میں بھی داخل ہوتاہے ۔انہوں نے الزام لگایا کہ شہر میں نکاسی آب کا نظام مکمل طور ناکام ہوچکا ہے اور شہر میں جہاں کہیں بھی نکاسی آپ کیلئے ڈرینیں تعمیر کی جارہی ہیں وہ اکثر ناکا م ہوتی ہیں ۔شہر کے بعض علاقوں کے لوگوں نے کہا کہ نکاسی آب کے ناکام نظام کی وجہ سے سڑکوں پر جمع پانی مکانوں کی بنیادوں میں جذ ب ہورہا ہے جس سے کہ ان مکانات کو نقصان پہنچنے کااحتمال ہے۔خبررساں ایجنسی سی این آئی نے  بتایا کہ چھتہ بل میں نکاسی آب کا نظام ستمبر2014کے سیلاب میں ناکام ہوگیا اور سیلاب میں بہہ جانے والا ساراکوڑاکرکٹ ان ڈرینوں میں جمع ہوگیا جس کی وجہ سے بارشوں کارسارا پانی سڑکوں پر جمع ہوجاتا ہے۔ غلام نبی خان نامی ایک مقامی شہری نے بتایا کہ پہلے ہی 2014کے سیلاب نے ہمارے مکانوں کی بنیادوں کو کمزور بنادیا ہے اور اب اس بارش کا پانی بھی مکانوں کی بنیادوں میں جذب ہورہا ہے اور اگر اس علاقے سے نکاسی آب کا فوری انتظام نہیں کیاگیا تو علاقے میں کئی مکان بارش کا یہ پانی  بنیادوں میںجذب  ہونے کے بعد گرسکتے ہیں ۔