تازہ ترین

برفباری سے پیدا شدہ صورتحال

گورنر انتظامیہ کے دعوئوں کی قلعی کھل گئی: ساگر

8 فروری 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

سرینگر//نیشنل کانفرنس جنرل سکریٹری علی محمد ساگر نے شہر سرینگر کے کئی علاقوں کا پیدل دورہ کیا اور برفباری سے پیدا شدہ حالات کا جائزہ لیا۔ برفباری سے پیدا شدہ صورتحال سے نمٹنے میں انتظامیہ کی ناکامی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ساگر نے کہا ہے کہ برفباری شروع ہونے کے ساتھ ہی جس طرح سے انتظامیہ بے بس نظر آرہی ہے اُس سے صاف ظاہر ہورہا ہے کہ انتظامیہ اس بھی مکمل طور پر تیار نہیں تھی۔ انہوں نے کہا کہ چند انچ برفباری نے گورنر انتظامیہ کی کے بلند بانگ دعوئوں کی قلعی کھول کر رکھ دی ہے ۔انہوں نے کہا کہ رابطہ سڑکوں اور گلی کوچوں کی بات تو دور کی بات دن کے دو بجے تک بھی بہت سی کلیدی سڑکوں پر برف ہٹائی نہیں گئی تھی،گورنر انتظامیہ نے لوگوں کو حالات کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا ، یہاں تک کہ وادی کے مرکزی ہسپتالوں میں بھی لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ ساگر نے کہاکہ گذشتہ 4سال سے مسلسل طور پر دعوے کئے جارہے ہیں سرینگر کو سمارٹ سٹی میں تبدیل کیا جارہا ہے لیکن حقیقت میں ان برسوں کے دوران شہر کو مزید پیچھے دھکیل دیا گیاہے۔ انہوں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ کپوارہ، بارہمولہ، بڈگام، شوپیان، پلوامہ ، اسلام آباد، کولگام، گاندربل، بانڈی پورہ اور خطہ چناب و پیرپنچال کے دور دراز اور پہاڑی علاقوں میں انتظامیہ اور حکومت کا کہیں نام و نشان نہیں، تمام چھوٹی بڑی سڑکیں بند پڑیں ہیں جس وجہ سے لوگوں کو مشکلات کا سامنا ہے جبکہ لازمی خدمات کا کہیں نام و نشان نہیں۔