تازہ ترین

ریلائنس ہیلتھ انشورنس تنخواہوں سے کتنی رقم کاٹی گئی؟

حکومت ظاہر کریں: پی ڈی پی

11 فروری 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نیوزڈیسک

رینگر//ریلائنس انشورنس سکیم کے حوالے سے جعلسازی کی تفصیلات کوکو عوام کے سامنے لانے کا مطالبہ کرتے ہوئے پیوپلز ڈیموکریٹک پارٹی نے ریاستی گورنر ستیہ پال ملک پر زور دیا ہے کہ وہ اس سیکنڈل کی تفصیلات سامنے لائیں کیونکہ گورنر نے ازخود اس انشورنس سکیم کو فراڈ اور جعلسازی سے بھرپور قرار دیا تھا ۔پی ڈی پی کے سینئر لیڈر نعیم اختر نے گورنر سے مطالبہ کہ کہ ریلائنس انشورنس سکیم کی عمل درآمد میں ملوث افسران کیخلاف کاروائی ہوئی تو اسے بھی سامنے لایا جائے ۔نعیم اختر نے کہاکہ جعلسازی اور فراڈ سے بھرپور ریلائنس انشورنس ہیلتھ سکیم کو محض بند کرنے سے کام نہیں چلے گا بلکہ اس کی دقیق تحقیقات کرکے اس میں ملوث افسران کیخلاف کاروائی ناگزیر ہے ۔نعیم اختر نے گورنر سے سوال کیا کہ کیا ایسا عمل جو کہ جعلسازی سے بھرپور ہو ،کو محض ختم کرنا کافی ہے ۔کیا اس فراڈ میں ملوث افراد کیخلاف کاروائی نہیں ہونی چاہئے ،۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ ملازمین کی تنخواہوں سے کاٹے گئی انشورنس پریمیم جو مذکورہ کمپنی کو فائدہ پہنچانے کیلئے لاگو کی گئی تھی ،کو واپس کیا جائے تاکہ ملازمین کا سسٹم پر بھروسہ برقرار رہے ۔پی ڈی پی لیڈر نے کہاکہ اگر ایک پتواری یا پولیس اہلکار کا نام کسی کورپشن الزام میں آتا ہے تو اسے ایف آئی آر درج کئے جانے کے بغیر ہی نام ظاہر کرکے اسکی رسوائی کا سامان کیا جاتا ہے تو اس جعلسازی کے معاملے میں کسی کا نام ظاہر کیوں نہیں کیا جارہا ہے حالانکہ ریاستی گورنر نے ازخود اس بات کا اعتراف کیا کہ اس سکیم کی عمل آوری میں کچھ سنگین معاملہ ہوا ہے ْ۔نعیم اختر نے کہاکہ اس آرڈر کوکالعدم قرار دئے 4ماہ ہوئے ہیں لیکن لوگ اب بھی اس بات پر حیران ہیں کہ اس بڑے فراڈ پر خاموشی سی کیوں چھائی ہے ۔انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ فی الفور تحقیقات عمل میں لائے اور جعلسازی میں ملوث افراد کو قانون کے شکنجے میں جکڑا جائے ۔