خورشید گنائی کا متعدد تعلیمی اداروں کا دورہ

یکم اپریل سے ’’وقت پر حاضرباشی کا ہفتہ‘‘ منایا جائیگا

15 مارچ 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نیو ڈسک
سرینگر//گورنر کے صلاحکار خورشید احمد گنائی نے سرینگر کے مختلف تعلیمی اداروں کا دورہ کر کے اُساتذہ اور طُلباء کے ساتھ تبادلہ خیال کیا۔مشیر نے کہا کہ تعلیمی سیکٹر جموں وکشمیر کی مجموعی ترقی کیلئے اہم شعبۂ ہے اور پرائمری سکولی تعلیم بھی لازمی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت یکم اپریل سے6 اپریل تک’’ پنکچولٹی ویک‘‘ (وقت پر حاضر باشی کا ہفتہ) منائے گی۔ انہوں نے سکول عملے اور طُلباء پر زور دیا کہ وہ باقاعدگی کو یقینی بنائیں اور سرکاری طور پر چلائے جارہے تعلیمی اداروں کو مزید فعال بنانے میں اپنا رول ادا کریں۔مشیر نے دورے کے دوران گورنمنٹ بائز ماڈل ہائیر سکینڈری سکول شالیمار سرینگر، بائز ہائیر سکینڈری سکول حضرت بل، گورنمنٹ گرلز ہائیر سکینڈری سکول علمگری بازار، تاریخی ایم پی ہائیر سکینڈری سکول سرینگر کے دورے کے دوران طُلباء ا ور عملے کے ساتھ بات چیت کی۔ ڈائریکٹر سکول ایجوکیشن کشمیر، جوائنٹ ڈائریکٹر سکول ایجوکیشن کشمیر، چیف ایجوکیشن افسر سرینگر اور محکمہ کے دیگر افسران بھی مشیر کے ہمراہ تھے۔خورشید گنائی نے مختلف سکولوں کے معائنہ کے دوران طُلباء کو پڑھائے جارہے مضامین کے بارے میں گفت و شنید کی۔ انہوں نے اساتذہ اور محکمہ کے افسروں پر زور دیا کہ وہ نئی ٹیکنالوجی کی بدولت تعلیمی نظام میں مزید بہتری لائیں۔دورے کے دوران مشیر کو سکولوں میں درکار بنیادی ڈھانچے کے بارے میں جانکاری دی گئی۔انہوں نے کہا کہ سکول ایک ایسی جگہ ہے جہاں بچوں کو بہتر مستقبل فراہم کرنے کے لئے تیار کیا جاتا ہے۔انہوں نے افسروں پر زور دیا کہ وہ سکولوں میں صحت و صفائی کو یقینی بنائیں تا کہ طُلباء صاف ماحول میں تعلیمی سرگرمیاں جاری رکھ سکیں۔اس موقعہ پر خورشید گنائی نے طُلباء سے تعلیم کے بارے میں جانکاری حاصل کی۔ایم پی ہائیر سکینڈری سکول کے دورے کے دوران خورشید گنائی نے کہا کہ موجودہ ٹیکنالوجی کی بدولت تعلیمی سرگرمیوں میں خاصی بہتری درج کی گئی ہے۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ سکول میں ڈیجیٹل کلاس رومز اور ورچول لیبارٹریاں قائم کی گئی ہیں تا کہ طُلباء کو جدید تعلیم سے روشناس کیا جاسکے۔
 

تازہ ترین