ریذیڈنسی روڑ پر عمارت کا ایک کونہ ڈھہ گیا

راہگیروں میں افرا تفری

15 اپریل 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

 سرینگر //ریذیڈنسی روڑ رپر ریگل چوک کے قریب اُس وقت افرتفری اور بھاگم بھاگ کا ماحول قائم ہو گیا جب وہاں ایک عمارت کا ایک کونہ ڈھہ گیا جس کے بعد تاجر اور خریدرار دکانوں سے باہر آئے اور محفوظ مقامات کی طرف دوڑ پڑے۔ اتوار کو قریب 4بجے مہراج ملک بلڈنگ ریگل چوک کی عمارت ،جس کے پیچھے ڈرین کی تعمیر کا کام چل رہا ہے، عمارت کا ایک کونہ ڈھ گیا جس سے عمارت میں دراڑیں پڑ گئیں ۔دکانداروں کا کہنا ہے کہ کچھ ماہ سے عمارت کے پیچھے ڈرین کی تعمیر ہو رہی ہے اور اتوار کو بھی کام جاری تھا جس کے دوران قریب چار بجے عمارت کا پچھلا حصہ ڈھہ گیا جس سے پوری عمارت ہل گئی ۔دکانداروں کا کہنا ہے کہ انہیں ایسا لگا جیسے زلزلہ ہو رہا ہواور وہ باہر آئے اور چیخ وپکار کرنے لگے اور لوگوں کو عمارت کے نیچے سے ہٹنے کو کہنے لگے ۔ اس صورتحال کی وجہ سے ریگل چوک میں موجود لوگ ادھر اُدھر بھاگنے لگے جبکہ دکانداروں نے بھی دکانوں کو فی الفور بند کر کے محفوظ مقامات کی طرف رخ کیا ۔ دکانداروںنے دکانوں سے ضروری ساز وسامان کو بھی نکالتے ہوئے دیکھا گیا ۔ ایک حصہ کے ڈھہ جانے کے سبب عمارت میں موجود جوتوں کی دکان باٹا کا سامان بھی تباہ ہوا ہے ۔ دکانداروں کا کہنا ہے کہ عمارت کے اندر دکانوں کے کمروں کا سامان بھی گر گیا جبکہ عمارت میں دراڑیں بھی پڑ گئیں ۔واضح رہے کہ عمارت میں قریب 30شو روم اور دفاتر ہیں جن میں معروف کولی برادرس ، معروف جوتوں کی دکان باٹا ، ایسکا سلیکشن ، ایکسلشر ریمنٹ ۔ موبائل شو روم نوکیا ، پیموما رڈی میڈ ، موبائل شو روم سیم سانگ گلکسی ، گھڑیوں کا شو رام TITANکے علاوہ دیگر دکانیں اور دفاتر بھی ہیں جنہیں اتوار کی شام چار بجے سے ہی بند کر دیا گیا ۔
 

تازہ ترین