راہل کی استعفی کی پیشکش، ورکنگ کمیٹی کو نامنظور

25 مئی 2019 (14 : 10 PM)   
(      )

نئی دہلی//کانگریس صدر راہل گاندھی نے کانگریس ورکنگ کمیٹی کی میٹنگ میں لوک سبھا انتخابات میں شکست کی اخلاقی ذمہ داری لیتے ہوئے استعفی دینے کی پیشکش کی ہے لیکن پارٹی کی اولین پالیسی ساز یونٹ نے انہیں استعفی نہ دینے کو کہا ہے ۔کانگریس کے ذرائع کے مطابق پارٹی کی اولین پالیسی ساز یونٹ کانگریس ورکنگ کمیٹی کی ہفتہ کو لوک سبھا انتخابات میں پارٹی کی کارکردگی اور پارٹی کو مضبوط بنانے کی حکمت عملی پر بات چیت کے لئے منعقد اجلاس میں مسٹر گاندھی نے عام انتخابات میں پارٹی کی شکست کے لئے خود کو ذمہ دار مانتے ہوئے استعفی دینے کی پیشکش کی لیکن کمیٹی کے تمام ارکان نے متفقہ طور سے ان سے ایسا نہیں کرنے کے پر زور دیا۔ ورکنگ کمیٹی کی میٹنگ صبح 11 بجے شروع ہوئی۔میٹنگ میں متحدہ ترقی پسند اتحاد کی صدر سونیا گاندھی، سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ، پارٹی جنرل سکریٹری کے سی وینوگوپال، سینئر لیڈر اے کے انٹونی، پرینکا گاندھی، پارٹی خزانچی احمد پٹیل، کیپٹن امریندر سنگھ ، شیلا دکشت سمیت تقریبا تمام اراکین موجود ہیں.یواین آئی

تازہ ترین