تازہ ترین

خانہ بدوشوں کوڈھوکوں میں جانے پرروک سے لوگ پریشان

چانہ میں اجلاس منعقد،ڈی سی ریاسی سے مداخلت کامطالبہ

4 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

زاہد ملک
مہور//مہور کے مقامی لوگوں کو ڈھوکوں میں جانے کیلئے انتظامیہ کی جانب سے اجازت نہ ملنے کے سلسلے میںچانہ میں گوجربکروال طبقہ کے لوگوں کاایک اجلاس منعقدہوا۔اس سلسلے میں خانہ بدوش گوجربکروالوں نے بتایا کہ اگرچہ ہم لوگ ہر سال اپنا مال مویشی لیکر کشمیر کی طرف ڈھوکوں میں جاتے ہیں لیکن اس بار ہمیں کشمیر جانے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے اوراگر کوئی بھی ڈیرا ڈھوکوں کی طرف رخ کرتا ہے اس کو پولیس روک دیتی ہے اور یہ کہہ کر اس کے اوپر ایف آئی آر لگائی جاتی ہے کہ وہ مویشیوں کو سمگلنگ کیلئے کشمیر لے جارہے ہیں۔لوگوں نے کہاکہ اب ہم مویشیوں کولے کرآگے نہیں بڑھ پارہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ اب علاقہ میں مکی بچھی ہوئی ہے اور انہیں مویشیوں کولیجانے کیلئے کوئی راستہ نہیں ہے جس کی وجہ سے ان کے مویشی فاقہ کشی کے شکار ہورہے ہیں۔یہاں چانہ کے ایک مقامی شخص منظور شاہ نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ ہم اپنی اپنی زمینیں آباد کرنے کے بعد اپنا مال لیکر ڈھوکوں میں جاتے ہیں لیکن اس بار ہمیں جانے کی اجازت نہیں دی جارہی ہیں۔انہوں نے کہاکہ ہم کشمیر جاتے ہیں جہاں پر ہمارا گھر ہے لیکن ہمیں وہاں جانے سے بھی روکا جارہا ہے۔عوام انتظامیہ سے کہتی ہیں جو بھی مویشی سمگلنگ کرنے کی کوشش کرتا ہے اس کے خلاف سخت کاروائی کی جائے اور جو لوگ اپنے مویشی لیکر ڈھوکوں میں چرانے کیلئے لے جاتے ہیں ان کو بے وجہ تنگ نہ کیا جائے۔خانہ بدوش گوجربکروالوں نے ڈی سی ریاسی سے مانگ کی ہے کہ ان کو پہاڑی علاقوں میں جانے کیلئے اجازت دی جائے۔اس سلسلے میں جب ڈی سی ریاسی سے نمائندہ نے بات کی توان کاکہناتھاکہ ہمارے پاس جوکوئی بھی اجازت حاصل کرنے آتاہے ہم اسے اجازت دے رہے ہیں۔