تازہ ترین

مزید خبرں

8 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

ڈی ا یچ سانبہ میں  ملیریا کی روک تھام پر  بیداری پروگرام کا اہتمام 

سانبہ //محکمہ صحت کی جانب سے کیمونٹی ہیلتھ سنٹر رام گڑھ،سانبہ میں ملیریا کی روک تھام کیلئے چیف میڈیکل افسر ڈاکٹر راجندر سمبیال کی نگرانی میں ایک بیداری پروگرم کا اہتمام کیا گیا۔بلاک میڈیکل افسر ڈاکٹرلکھویندر سنگھ ، ضلع ہیلتھ افسر ڈاکٹر سمن گپتا، ڈپٹی چیف میڈیکل افسر ڈاکٹرکامنی گپتا، پی آر آئی مبران کے علاوہ علاقہ کے معزز شہری بھی اس موقعہ پر موجود تھے۔کیمپ میں ملیریا کی روک تھام کے سلسلہ میں بیداری، اسکی علامت اور علاج و دیگر متعلقہ مدعوں کی جانکاری دی گئی۔سی ایم او نے اس موقعہ پر ملیریا کی علامتوں ، احتیاط اور علاج پر مفصل وشنی ڈالی ۔انہوں نے کہا کہ ملیریا کی شدت سے بچوں میں مستقل نیرولاجکل نقصان ہو سکتا ہے جبکہ حاملہ خواتین کی صورتحال میں مادر میں خون کی کمی، کم وزنی بچوں کی پیدائش و غیرہ ہو سکتے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ملیریا  ایک مہلک بیماری ہے،جسکا علاج ہوسکتاہے اور پوری طرح سے ٹھیک ہو سکتی ہے۔
 

پی ڈی پی نے رنگیل سنگھ کو دوسری برسی پر خراج ادا کیا 

جموں //پیوپلز ڈیموکریٹک پارٹی نے سابقہ وزیر کو انکی دوسری برسی پر گلاہائے عقیدت ادا کرنے کے لئے پارٹی کے صدر دفتر پر ایک پروگرام کا اہتما م کیا گیا ، جس میں پارٹی کے سینئر لیڈروں نے مرحوم کو زبرد ست خراج ادا کیا۔سردار رنگیل سنگھ کو خراج عقیادت ادا کرتے ہوئے پارٹی لیڈروں نے جموں خطہ میں پارٹی کو مستحکم بنانے اور مرحوم مفتی سعید کے ساتھ انکے تعلقات کو یاد کیا۔مرحوم تین مرتبہ ایم ایل اے رہنے کے علاوہ پی ڈی پی کے سینئر نائب صدر بھی رہے ہیں۔خراج عقیدت ادا کرنے والوں میں ٹی ایس باجوا، چودھری عبدل حمید، وید مہاجن ، ایف سی بھگت، آر کے بالی ،فلیل سنگھ ، رومیش کول، دمن بھسین ، راجندر منہاس، امریک سنگھ رین ، عبدل ریشد ملک،چودھری  حسین علی وفا، ست پال سنگھ چاڑک، اشوک جوگی، سکھیویندر سنگھ ،نریندر سنگھ رینہ، رنبیر سنگھ مانگا، ای۔پیٹر، سنیل بھٹ، ایس کے رینہ، ایس ایس سنگرال ، چمن منیال ،ساگر آنند گل، وجے کمار چودھری ،کے یش بیر سنگھ منہاس و دیگران بھی شامل تھے۔
 
 

 این جی او ’’وی دی ہیومن‘‘ کی جانب سے  جی ایس ٹی  پر پروگرام کا اہتمام 

جموں // قدرت اور انسانیت کیلئے فورم وی دی ہیومن کی جانب سے جاری ایک پریس بیان میں ریاست کے کاروباری ادارے کے ممبروں پر ریاست کی ترقی کے لئے تعمیری رول نبھانے پر زور دیا گیا ہے۔ این جی او ’’وی دی ہیومن‘‘ کی جانب سے جی ایس ٹی منعقدہ ایک پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے سرکردہ ایڈوکیٹ صاحب اگروال اور ٹرسٹ کے سینئر ممبروں نے کہا کہ جی ایس ٹی این بلواسطہ ٹیکس ہے،جس نے کثیر ٹیکسوں کو کم کر دیا ہے۔اسلئے حکام کیلئے غیر ۔رجسٹرڈ اداروںکی جانب سے اسکی عدولی کرنے والوں کی شناخت کرنا ایک چلینج ہے ،جو اپنی سیلز کو چھپانے کے لئے گاہکوں کوبل جاری نہیں کرتے ہیں،جو کہ CGST Act 2017  دفعہ 132(1)a کے تحت قابل سزا جرم ہے۔تاہم، عدالت عظمیٰ نے اس سلسلہ میں ابھی تک وضاحت نہیں کی ہے کہ جی اسی ٹی کی عدولی کرنے والے کو گرفتار کیا جا سکتا ہے یا نہیں۔جی ایس ٹی سے بچنا ،ٹیکس کی رقم میں خسارہ لا سکتا ہے ،جس سے بجٹ میں خسارہ ہو جا سکتا ہے اور جس کا آخر کار ملک کی ترقی متاثر ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ جی ایس ٹی ریٹرن دائر کرنا ہمارا اخلاقی فرض بنتا ہے۔صاحب نے مزید کہا کہ لوگوں کو جی ایس ٹی کاٹنے کے لئے بلیں حاصل کرنے پر اسرار کرنا چاہیے ۔انہوں نے کہا کہ جی ایس ٹی کاٹنے والوں کی عدولی کونے والوں کے خلاف سخت کاروائی کرنے کی ضرورت ہے۔