تازہ ترین

انجینئر کا ملوثین کوکیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ

16 جولائی 2019 (40 : 10 PM)   
(      )

نیو ڈسک
سرینگر/ /عوامی اتحاد پارٹی کے سربراہ انجینئر رشید نے گلگام کپوارہ میں 8 سالہ عمر فاروق کی پہلی برسی پراُن کے گھر پر منعقدہ ایک تقریب کے دوران مطالبہ کیا کہ اس واردات میں ملوث افرادکو اب بغیر کسی تاخیر کے کیفر کردار تک پہنچایا جائے ۔ یاد رہے عمر فاروق کو اپنے گھر کے قریب اغوا کر کے نہ صرف ان کے جسم کے کئی ٹکڑے کئے گئے تھے بلکہ اُن کے جسم کو جلا بھی دیا تھا۔انجینئر رشید نے کہا کہ اگر چہ یہ بات باعث تشویش ہے کہ ایک برس گذرنے کے باوجود بھی معاملہ جوں کا توں ہے لیکن کرائم برانچ اب معاملے کی تحقیقات کر رہا ہے اور باوثوق ذرائع سے یہ بات کہی جا سکتی ہے کہ محکمہ نے لگ بھگ اس دردناک واردات میں ملوث افراد کی نشاندہی کر دی ہے۔انہوں نے کہا کہ توقع ہے کہ چند دنوں کے اندر معاملہ عدالت میں پیش کیا جائے گا تاکہ تیز رفتاری کے ساتھ مقدمہ کی سماعت شروع کی جا سکے ۔ انجینئر رشید نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ سرکار کی طرف سے ابھی تک نہ ہی عمر فاروق کے اہل خانہ کو کوئی امداد دی گئی اور نہ ہی انہیں کسی طرح سے اُن لوگوں نے کوئی رفاقت کی جو پچھلے سال پوری ریاست کے اندر سراپا احتجاج تھے۔ انہوںنے اس موقعہ پر لوگوں سے سماجی بدعات خاص طور سے منشیات کے خلاف بھر مہم چلانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا ’’ہم سب کو یہ بات نہیں بھولنی چاہئے کہ ریاست خاص طور سے وادی میں منشیات کا کاروبار بہت زور پکڑتا جا رہا ہے اور نوجوان نسل بد قسمتی سے اس لعنت کا شکار ہو رہی ہے‘‘ ۔انہوں نے کہا وقت کا تقاضہ ہے کہ اساتذہ ، والدین ،سماجی کارکن ، علماء اور عام لوگوں کو ایک جٹ ہو کر منشیات کے خلاف جہاد کر نا چاہئے ۔