تازہ ترین

جموں میں انجینئروں کی احتجاجی ریلی

17 جولائی 2019 (10 : 03 AM)   
(      )

نیو ڈسک
جموں//تما م کیڈر کے سرکاری انجینئروں (چیف انجینئر وں، ایس ا ئیز، ایگزیکٹو انجینئروں ،اے ای ائیز ،اے ائیز اور جے ائیز )نے جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے بینر تلے لوک نرمان بھون میں اپنے عرصہ دراز سے التوا میں پڑے مطالبات کے حل کیلئے ایک جامع احتجاجی ریلی کا اہتمام کیا گیا ۔ان مطالبات میں ڈاکٹروں کے طرز پر ٹائم باونڈ رننگ گریڈ وغیرہ فراہم کرنے ،تمام سطحوں پر انجینئروں کو باقاعدہ بنانے،انجینئرنگ محکمہ میں کیڈر پر سر نو جائزہ لینے،تمام خالی اسامیوں کو پورا کرنے،انجینئروں کی تنخواہوں میں تفاوت کو دور کرنا اور مقرر کردہ سفر خرچہ میں اضافہ کرنا بھی شامل تھا۔اپنی نوعیت کے اس پہلے احتجاج میں ضلع صدر مقاامت پر بھی انجینئروں نے احتجاج کیا۔انجینئروں کے ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انجینئر گن دیپ پرگال نے سرکار کی اجنب سے انجینئروں کے مطالبات حل کرنے میں لیت و لعل اپنانے پر برہمی کا اظہار کیا اور کہا کہ گورنر کی یقین دہانیاں بھی اسلسلہ میں بیکار ثابت ہوئی ہیں۔انہوں نے کہا کہ ریاست کے گورنر نے انہیں یقین دلایا تھا کہ جونہی سرینگر میں دربار کھولا جائے گا تو انکے مطالبات پر غور کیا جائے گا لیکن یہ یقین دہانی صیح ثابت نہیں ہوئی۔ انہوں نے سرکا رسے انجینئروں کے جذبات کے ساتھ مزید کھلواڑ نہ کرنے کی اپیل کی اور انجینئروں کے مطالبات فوری طور حل کرنے کی اپیل کی۔ اس موقعہ پر مقررین نے انجینئروںکے مطالبات فوری طور حل کرنے کا مطالبہ کیا گیا ۔مقررین میں انجینئر ذیڈ اے ملک،  انجینئر گوپال شرما ،  انجینئر راحت گپتا،  انجینئر  انیل تھاپا،  انجینئر  آشیش بھسین ، انجینئر  نیرج شرما ، انجینئر  نونیت ، انجینئر  راجن مینگی،  انجینئر  کلبھوشن باہو اور دیگران بھی شامل تھے۔