تازہ ترین

دہلی خواتین کمیشن کی چیف سواتی مالیوال نے

شیئر کیا ریپ ویڈیو، پھر ڈیلیٹ کر مانگی معافی

25 جولائی 2019 (30 : 10 PM)   
(      )

 نئی دہلی//نے ویڈیو ڈیلیٹ کر معافی مانگی۔غور طلب ہے کہ ریپ متاثرین کی پہچان اجاگر کرنا غیر قانونی ہے۔انڈین ایکسپریس کے مطابق؛ویڈیو ڈیلیٹ کرنے کے بعد معافی مانگتے ہوئے مالیوال نے کہا،’ ویڈیو شیئر کرنے کا مقصد مجرم کی پہچان  اجاگر کرنا تھا۔حالانکہ میں نے ویڈیو ڈیلیٹ کر دیا ہے اور پولیس سے رپورٹ مانگی ہے۔ اگر میں نے کسی کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی ہے تو  میں معافی مانگتی ہوں۔’اس سے پہلے ویڈیو شیئر کرتے ہوئے مالیوال نے دہلی پولیس کو ٹیگ کرتے ہوئے لکھا تھا،’اس کو دیکھ کر میں پریشان ہو گئی۔ دہلی پولیس مہربانی کر کے فوراً ایف آئی آر درج کریں اور اس بیمار ذہنیت کے انسان کو گرفتار کریں۔’مالیوال نے دعویٰ کیا کہ انھوں نے ڈپٹی کمشنر آف پولیس (سینٹرل)مندیپ سنگھ رندھاوا کو نوٹس بھیجا ہے جس میں لکھا ہے کہ ڈی سی ڈبلیو کو یہ ویڈیو سوشل میڈیا سے ملا اور یہ بہت ہی پریشان کرنے والا ہے۔ اس بارے میں ایک زیرو ایف آئی آر ضرور درج ہونی چاہیے۔وہیں ،دہلی پولیس کے ایڈیشنل پی آر اوانل متل نے کہا،’ہم نے پایا ہے کہ ویڈیو دہلی کا نہیں ہے۔’مالیوال کے ٹوئٹ ڈیلیٹ کرنے سے پہلے وہ تقریباً 200 بار شیئر ہو چکا تھا۔دہلی پولیس کے ایک افسر نے کہا،’یہ آئی پی سی کی دفعہ 228 اے کی خلاف ورزی ہیلیکن ان کے خلاف کوئی شکایت درج نہیں کرائی گئی ہے۔’