تازہ ترین

’اپنی مدد آپ‘کے تحت کینٹھہ بولنی ٹاپ روڈ کی مرمت

1 اگست 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

زاہد بشیر
گول//جہاں ایک طرف سے شدید بارشوں کی وجہ سے سب ڈویژن گول میں سڑکوں کی حالت نہایت ہی ابتر ہو گئی وہیں دوسری جانب سالہا سال سے سڑکوں کی حالت کو بہتر بنانے کے لئے کوئی بھی محکمہ سامنے نہیں آ رہا ہے ۔ اس سے قبل بھی گول سلبلہ روڈ پر یہاں کی مقامی سماجی تنظیم نے خود قدم اُٹھا کر سڑک کی حالت کو بہتر بنایا تھا ۔ آج پھر سے کینٹھہ بولنی ٹاپ روڈ کو پیس اینڈ ویلفیئر کمیٹی گول اور سول سوسائٹی کی مدد سے لوگوں نے سڑک کی حالت کر بہتر بنانے کا قدم اُٹھایا ۔ مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ کئی مرتبہ محکمہ پی ڈبلیو ڈی اور پی ایم جی ایس وائی سے مطالبہ کیا گیااور سڑک کی حالت کو بہتر بنانے کے لئے احتجاج بھی کیا گیا لیکن اس کے با وجود نہ ہی انتظامیہ نے توجہ دی اور نہ ہی سرکار نے اس طرف دھیان دینے کی ضرورت سمجھی ۔ بالآخر مقامی لوگوں نے باہر آکر گول کی سماجی تنظیموں کے ساتھ مل کر سڑک پر پڑے کھڈوں کی بھرائی کی ۔ مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ سڑک کے ساتھ ساتھ لوگوں کے بہت سارے مسائل سے دوچار ہیں لیکن افسوس کا مقام ہے کہ یہاں انتظامیہ نام کی کوئی چیز ہی نہیں ہے ۔ گول سب ڈویژن میں اکثر ایسی سڑکیں ہیں جن کی حالت نہایت ہی ابتر ہے جن میں زیادہ تر روڈ پی ڈبلیو کے پاس ہیں ۔لوگوں کاکہناہے کہ محکمہ نے تمام سڑکوں پر غیر ذمہ دارانہ طریقے سے کام کیا ہے جس وجہ سے آج سڑکوں کی حالت ابتر ہے جس کا اعتراف یہاں کی مقامی انتظامیہ نے بھی کیا ہے ۔ جب بھی محکمہ کسی سڑک پر کام کرتا ہے تو نالیاں بند کرکے چلا جاتا ہے ، سڑکوں کے بیچوں بیچ ملبہ پڑارہتاہے جسے اُٹھانے کی زحمت گوارہ نہیں سمجھی جاتی ۔لوگوں کاکہناہے کہ ٹھیکیداروں نے تعمیرات کے دوران ملبہ ڈالا ہے لیکن اُٹھایا نہیں جس وجہ سے آج کل کے موسم میں تمام پانی لوگوں کی اراضی اور رہائشی مکانات میں جاتا ہے ۔وہیں اگر گول سلبلہ کے علاوہ بائی پاس، جنگلات روڈ، ششل روڈ ، گھوڑا گلی سے داچھن پوائنٹ تک ، گراٹ موڑ ملجی روڈ ،جمن سے ہارہ تک وغیرہ سڑکوں کی حالت دیکھی جائے تو وہ بھی انتہائی ابتر ہے ۔تمولہ سے محکمہ نے ایک لنک روڈ بھی نکالاجو ایک کلو میٹر کے قریب ہے جس کی حالت بھی خراب ہے ۔