تازہ ترین

راجوری : 1745 انفرادی اور 147 کمیونٹی بنکرتیا رہو نگے

مالی سال 2019-20 کیلئے 19893.55 لاکھ روپے کا مالی منصوبہ

4 اگست 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

 راجوری//سرحدی ضلع راجوری میںمالی برس 2018-19 کے دوران دستیاب 24452.52 لاکھ روپے میں سے اب تک 23900.59 لاکھ روپے خرچ کئے جا چکے ہیں جبکہ سال 2019-20 کیلئے 19893.55 لاکھ روپے کا مالی منصوبہ بنایا گیا ہے جبکہ حد متارکہ کے قریب لوگوں کیلئے  1745 انفرادی اور 147 کمیونٹی بنکرتیا ر کئے جائے گئے ۔ان خیالات کا اظہار ضلع حکام نے ریاستی گورنر کے مشیروں کو ترقیاتی پروجیکٹوں کی موجودہ صورتحال کی جانکاری فراہم کرتے ہوئے کیا ۔ گورنر کے مشیروں کے وجے کمار ، کے کے شرما اور کے سکندن کی جانب سے منعقدہ جائزہ میٹنگ میں فائنانشل کمشنر صحت و طبی تعلیم اٹل ڈولو ، ڈپٹی کمشنر راجوری اعجاز اسد اور پولیس و سول انتظامیہ کے اعلیٰ افسران موجود تھے ۔ ڈپٹی کمشنر نے ایک پاور پوائنٹ پرذنٹیشن کے ذریعے صحت ، بجلی ، صحت عامہ ، تعمیراتِ عامہ ، تعلیم ، زراعت اور باغبانی محکموں میں حاصل کئے گئے اہداف کے بارے میں تفصیلی جانکاری دی ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ سال 2018-19 کے دوران دستیاب 24452.52 لاکھ روپے میں سے اب تک 23900.59 لاکھ روپے خرچ کئے جا چکے ہیں جبکہ سال 2019-20 کیلئے 19893.55 لاکھ روپے کا مالی منصوبہ بنایا گیا ہے ۔ میٹنگ میں ضلع میں بنکروں کی تعمیر کا جائیزہ لیتے ہوئے بتایا گیا کہ ضلع میں کُل 1892 بنکر تعمیر کرنے ہیں جن میں 1745  انفرادی  اور 147 کمیونٹی بنکر شامل ہیں ۔ مشیروں نے ضلع میں التوا میں پڑے پروجیکٹوں کی صورتحال کا بھی جائیزہ لیا ۔ انہیں بتایا گیا کہ مختلف محکموں کی جانب سے التوا میں پڑے پروجیکٹ دوبارہ در دست لئے گئے ہیں ۔ میٹنگ میں مزید بتایا گیا کہ کُل 244 پروجیکٹوں میں سے 57 مکمل کئے جا چکے ہیں ۔ میٹنگ میں بجلی کی صورتحال کا بھی جائیزہ لیا گیا ۔ مشیروں کو بتایا گیا کہ 132 کے وی بارن ۔ کالا کوٹ  سرکٹ پر کام جاری ہے ۔ بجلی محکمے کو تمام پروجیکٹ جلد از جلد مکمل کرنے کی ہدایت دی گئی تا کہ لوگ ان سے استفادہ کر سکیں ۔ اس دوران مشیروں نے ضلع میں سوبھاگیہ سکیم کی عمل آوری کا بھی جائیزہ لیا ۔ صحت عامہ سیکٹر کے بارے میں مشیروں کو بتایا گیا کہ محکمہ نے 61 پروجیکٹوں کا کام در دست لیا ہے جن کیلئے ٹینڈر اجراء کرنے کا عمل شروع کیا گیا ہے ۔ میٹنگ میں بھیڑ و پشو پالن ، صنعت و حرفت اور مال محکموں کی کارکردگی کا بھی جائیزہ لیا گیا ۔ میٹنگ کے بعد کئی وفود نے مشیروں کے ساتھ ملاقات کر کے اپنے مسائل اُن کی نوٹس میں لائے ۔ مشیروں نے لوگوں کے جائیز مطالبات پورا کرنے کا یقین دلایا ۔ افسروں کو ہدایت دی گئی کہ وہ لوگوں کو بہتر سہولیات فراہم کرنے کیلئے عوام کے ساتھ قریبی رابطے میں رہیں ۔ مشیروں نے افسروں سے کہا کہ وہ عوامی خدمات کی دستیابی کیلئے لگن اور تندہی کے ساتھ کام کریں۔